Sar Zameen-e-Pakistan (Urdu Poem)

ایک طرف ریت کے ٹیلوں سے اٹھتی سرگوشیاں
ایک طرف برفیلی چٹانوں سے گونجتی ہیں سیٹیاں
فضاءیں رخ بدل بدل کر ہیں بوسہ دے رہی
کھیتوں سے ٹھنڈی ہواءیں مٹا رہی خاموشیاں

ایک طرف دریا ابل رہے ہیں بل کھاتے ہوے
ایک طرف سمندر کا سکوں لے رہا انگڑاءیاں
سورج ابھرتا ڈوبتا گواہی ہے بدلتے لمحوں کی
راتوں کو چاندنی میں ڈھلی پر سرور وادیاں

ایک طرف برسات کی بارش لیے ہے لپیٹ میں
ایک طرف بنجر زمیں میں کانتے بنیں رنگینیاں
یہ خطہ زرخیز ہے؛ ایک ایک منظر ہے پر کشش
پاکستان ۔ یا چنبیلیاں یا بحر عرب کی سیپیاں

۔ نبیہہ ذیشان

Advertisements